Play Copy

ﭴﭵﭶﭷﭸﭹﭺﭻﭼﭽﭾﭿﮀﮁﮂﮃﮄﮅﮆﮇﮈﮉ

7. (اے حبیبِ مکرّم!) یہی وہ لوگ ہیں جو (آپ سے بُغض و عِناد کی بنا پر) یہ (بھی) کہتے ہیں کہ جو (درویش اور فقراء) رسول اللہ (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) کی خدمت میں رہتے ہیں اُن پر خرچ مت کرو (یعنی ان کی مالی اعانت نہ کرو) یہاں تک کہ وہ (سب انہیں چھوڑ کر) بھاگ جائیں (منتشر ہوجائیں)، حالانکہ آسمانوں اور زمین کے سارے خزانے اللہ ہی کے ہیں لیکن منافقین نہیں سمجھتےo

7. (O Esteemed Beloved!) They are the people who say this as well (out of malice and enmity against you): ‘Do not spend on those (destitute devotees of Allah) who remain in the presence of the Messenger of Allah (i.e., do not provide them financial help) until they (all may desert him and) flee away (and disperse). In truth, to Allah belong all the treasures of the heavens and the earth, but the hypocrites do not understand.

(الْمُنَافِقُوْن، 63 : 7)