Play Copy

ﭹﭺﭻﭼﭽﭾﭿﮀﮁﮂﮃﮄﮅﮆﮇﮈﮉﮊﮋﮌﮍﮎﮏﮐﮑﮒﮓﮔﮕﮖﮗﮘﮙﮚﮛﮜﮝﮞﮟﮠﮡﮢﮣ

13. اُس نے تمہارے لئے دین کا وہی راستہ مقرّر فرمایا جس کا حکم اُس نے نُوح (علیہ السلام) کو دیا تھا اور جس کی وحی ہم نے آپ کی طرف بھیجی اور جس کا حکم ہم نے ابراھیم اور موسٰی و عیسٰی (علیھم السلام) کو دیا تھا (وہ یہی ہے) کہ تم (اِسی) دین پر قائم رہو اور اس میں تفرقہ نہ ڈالو، مشرکوں پر بہت ہی گراں ہے وہ (توحید کی بات) جس کی طرف آپ انہیں بلا رہے ہیں۔ اللہ جسے (خود) چاہتا ہے اپنے حضور میں (قربِ خاص کے لئے) منتخب فرما لیتا ہے، اور اپنی طرف (آنے کی) راہ دکھا دیتا ہے (ہر) اس شخص کو جو (اللہ کی طرف) قلبی رجوع کرتا ہےo

13. He has prescribed for you the same path of the Din (Religion) that He enjoined on Nuh (Noah), and that We have revealed to you, and that We enjoined on Ibrahim (Abraham) and Musa (Moses) and ‘Isa (Jesus. And all it denotes is) that you should hold fast to the same Din (Religion) and do not make divisions in it. That (Oneness of Allah) to which you call them is quite hard for those who set up partners with Allah. Allah chooses whom He pleases (for exclusive nearness) in His presence, and shows the path to (come) towards Himself to everyone who turns (towards Allah) heartily.

(الشُّوْرٰی، 42 : 13)