Play Copy

ﭱﭲﭳﭴﭵﭶﭷﭸﭹﭺﭻﭼﭽﭾﭿﮀ

42. جب انہوں نے اپنے باپ (یعنی چچا آزر سے جس نے آپ کے والد تارخ کے انتقال کے بعد آپ کو پالا تھا) سے کہا: اے میرے باپ! تم ان (بتوں) کی پرستش کیوں کرتے ہو جو نہ سن سکتے ہیں اور نہ دیکھ سکتے ہیں اور نہ تم سے کوئی (تکلیف دہ) چیز دور کرسکتے ہیںo

42. When he said to his father (i.e., his uncle Azar who brought him up after his father Tarakh died): ‘O my father, why do you worship these (idols) which cannot hear or see, nor can they remove any (troublesome) thing from you?

(مَرْيَم، 19 : 42)